33

نیب قوانین میں ترامیم کی بات اسٹبلشمنٹ کے کہنے پر ہوئی، رانا ثناءاللہ … ہمیں کہا گیا اسٹبلشمنٹ نے نیب قانون میں ترامیم پر بات کرنے کا کہا، شاہ محمود قریشی ترامیم کی بجائے … مزید


Live Updates

ہمیں کہا گیا اسٹبلشمنٹ نے نیب قانون میں ترامیم پر بات کرنے کا کہا، شاہ محمود قریشی ترامیم کی بجائے ہم سے کچھ اور باتیں کرتے رہے، ہم سامنے لائے تو کوئی گلہ نہ کرے، لیگی رہنما کی میڈیا سے گفتگو

Shehryar Abbasi شہریار عباسی
منگل دسمبر
22:38

نیب قوانین میں ترامیم کی بات اسٹبلشمنٹ کے کہنے پر ہوئی، رانا ثناءاللہ
لاہور (اُردوپوائنٹ اخبار تازہ ترین۔ 22 دسمبر2020ء) سینئر لیگی رہنما رانا ثناء اللہ نے کہا ہے کہ نیب قوانین میں ترامیم کی بات اسٹبلشمنٹ کے کہنے پر ہوئی تھی ۔ تفصیلات کے مطابق پاکستان مسلم لیگ (ن) پنجاب کے صدر رانا ثناء اللہ نے کہا ہے کہ قومی احتساب بیورو(نیب) قوانین میں ترامیم پر بات ن لیگ کے نہیں بلکہ اسٹیبلشمنٹ کے کہنے پر ہوئی ہے۔ میڈیا سے گفتگو میں ان کا کہنا تھا کہ حکومت جہاں سے انتقام چھوڑے گی ہم وہیں سے شروع کریں گے، استعفے آخری آپشن ہیں، این آر او کی بات جھوٹ سے سوا کچھ نہیں۔

(جاری ہے)

رانا ثناء کا کہنا تھا کہ ہمیں بتایا گیا کہ اسٹیبلشمنٹ نے نیب قانون میں ترامیم پر بات کرنے کا کہا ہے، شاہ محمود قریشی ترامیم کی بجائے ہم سے کچھ اور باتیں کرتے رہے، ہم سامنے لائے تو کوئی گلہ نہ کرے۔
انہوں نے کہا کہ شاہ محمود قریشی مذاکرات میں ’میاں صاحب‘ کو سلام اور ہمیں یہ پیغام دیتے رہے کہ پاگل ترامیم پر کوئی بات نہیں سن رہا۔
رانا ثناء اللہ لیگی رہنماؤں کھوکھر برادران سے اظہار یکجہتی کیلئے ان کی رہائش گاہ پہنچے۔لیگی رہنما کا کہنا تھا کہ وہ نواز شریف سے اپیل ہے کہ وہ لندن میں بیٹھ کر حکومت کی تکلیف میں اضافہ کریں، کھوکھر فیملی میاں برادران سے وفاداری نہیں چھوڑیں گے۔



پی ڈی ایم کا لاہور جلسہ سے متعلق تازہ ترین معلومات

متعلقہ عنوان :

کیٹاگری میں : News

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں